14

ملکی تاریخ میں پہلی بار لاہور کے مختلف علاقوں میں مصنوعی بارش

(آتش نیوز) ملکی تاریخ میں پہلی بار لاہور کے مختلف علاقوں میں مصنوعی بارش کی گئی۔ نگران وزیراعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ لاہور کے 10 سے 15 کلو میٹر کے ایریا میں یہ پلان کیا گیا اور 10 علاقوں میں ہلکی پھلکی بارش ہوئی، لاہور کے اکثر مقامات پر بارش ہوگئی ہے، مصنوعی بارش کے دوران 18 فائر فلیئرز فائر کئے گئے جبکہ مصنوعی بارش میں یو اے ای نے سپورٹ کیا۔ محسن نقوی کا کہنا تھا کہ مصنوعی بارش کیلئے ہم نے کوئی خصوصی خرچہ نہیں کیا، اس میں صرف پانی کا خرچ ہوا، اسموگ کے خاتمے کیلئے اگر خرچہ کرنا بھی پڑتا تو میں دریغ نہ کرتا جبکہ مصنوعی بارش کا صحت پر کوئی نقصان نہیں ہے، اگر نقصان ہوتا تو دبئی اور امریکا جیسے ممالک یہ نہیں کرتے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مصنوعی بارش کا تجربہ ہمارے کے لیے بہت ضروری تھا اور اس کے نتائج رات تک سامنے آئیں گے، آج مصنوعی بارش لاہور میں ہوئی ہے، یہ تجربہ نیا ہے، ایک مرتبہ پتا چل جائے تو اس تجربے کو دیکھیں گے اس کے بعد اگلا فیصلہ کریں گے، ابھی اس کے اثرات پر نظر رکھے ہوئے ہیں۔ نگران وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ وفاقی حکومت منصوعی بارش کے منصوبے پر کام کررہی ہے جبکہ لاہور شہر میں اسموگ ٹاورز بھی جلد انسٹال ہوجائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں